دھونی کے بارے میں بعض دلچسپ حقائق

Wed 13th Jul, 2016 Author: Cricketnmore Editorial

Dhoni 35th birthday

انڈین کرکٹ ٹیم کے کپتان مہندر سنگھ دھونی ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائر ہونے کے بعد بھی بھارت کے کامیاب ترین کرکٹر ہیں۔

مہندر سنگھ دھونی نے جمعرات کو اپنا 35 واں جنم دن منایا۔

اس موقع پر ان سے متعلق دس دلچسپ حقائق پیش کیے جاتے ہیں۔

1:مہندر سنگھ دھونی واحد ایسے کپتان ہیں جن کی قیادت میں ٹیم نے آئی سی سی کی تینوں بڑی ٹرافیاں جیتی ہیں۔ بھارت دھونی کی کپتانی میں آئی سی سی کی ورلڈ ٹی 20 (2007 میں)، کرکٹ ورلڈ کپ (2011 میں) اور آئی سی سی چیمپئنز ٹرافی (2013 میں) کا خطاب جیت چکا ہے۔
: انڈيا کے سب سے کامیاب کپتان دھونی کا پہلا پیار فٹ بال تھا۔ وہ اپنے سکول کی فٹبال ٹیم میں گول کیپر تھے۔ فٹبال سے ان کا لگاؤ وقتاً فوقتاً ظاہر ہوتا رہا ہے۔ انڈین سپر لیگ میں وہ ایک ٹیم کے مالک بھی ہیں۔ فٹبال کے بعد انہیں بیڈمنٹن بھی خوب پسند تھا۔

3: ان کھیلوں کے علاوہ دھونی کو موٹر ریسنگ سے بھی خاصا لگاؤ رہا ہے۔ انہوں نے موٹر ریسنگ میں ماہی ریسنگ ٹیم کے نام سے ایک ٹیم بھی خریدی ہوئی ہے۔

4: مہندر سنگھ دھونی اپنے بالوں کے سٹائل کے لیے بھی سرخیوں میں رہے ہیں۔ کبھی اپنے لمبے بالوں کے لیے معروف دھونی وقت وقت پر ہیئر سٹائل بدلتے رہے ہیں۔ لیکن کیا آپ کو معلوم ہے کہ دھونی فلم سٹار جان ابراہم کے بالوں کے دیوانے رہے ہیں۔ مہندر سنگھ دھونی 2011 میں بھارتی فوج میں اعزازی لیفٹیننٹ کرنل کے عہدے پر سرفراز کیےگئے تھے۔ دھونی کئی بار یہ کہہ چکے ہیں کہ بھارتی فوج میں شامل ہونا ان کے بچپن کا خواب تھا۔

6:سنہ 2015 میں آگرہ میں واقع بھارتی فوج کے پیرا رجمنٹ سے پیرا جمپ لگانے والے وہ پہلے بھارتی سپورٹس پرسن بنے۔ انہوں نے پیرا ٹروپر ٹریننگ سکول سے ٹریننگ لینے کے بعد تقریباً 15000 فٹ کی اونچائی سے پانچ بار چھلانگ لگائي ہے۔ اس میں سے ایک چھلانگ رات کے وقت لگائی گئی تھی۔

7: مہندر سنگھ دھونی موٹر بائیکس کے بھی دیوانے ہیں۔ ان کے پاس ایک سے بڑھ کر ایک تقریباً دو درجن جدید موٹر سائیکلیں ہیں۔ انہیں کاروں کا بھی بڑا شوق ہے۔ ان کے پاس ہمر جیسی کئی مہنگی کاریں موجود ہیں۔: شادی سے پہلے مہندر سنگھ دھونی کا نام بالی وڈ کی کئی ہائی پروفائل اداکاراؤں سے منسلک کیاگیا۔ لیکن انہوں نے چار جولائی، 2010 کو دہرادون کی ساکشی راوت سے شادی کی۔ دھونی اور ساکشی کی ایک بیٹی بھی ہے، جس کا نام جيوا ہے۔

9: ایم ایس دھونی کو بطور کرکٹر پہلی ملازمت انڈین ریلویز میں ٹکٹ کلیکٹر کے طور پر ملی تھی۔ اس کے بعد وہ ایئر انڈیا کی نوکری کرنے لگے۔ بعد میں وہ این شری نواسن کی کمپنی انڈیا سیمنٹ میں افسر بن گئے۔0:ایم ایس دھونی عالمی سطح پر سب سے زیادہ کمائی کرنے والے کرکٹرز میں سے ایک ہیں۔ ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائر ہونے سے پہلے ان کی اوسط آمدنی 150 سے 190 کروڑ روپے سالانہ تھی۔

اس کمائی میں اب بھی کوئی خاص کمی نہیں آئی ہے۔